Contents‎ > ‎

5. Sunnah and Hadith

5. Sunnah and Hadith   


In Islam, the Arabic word sunnah (sunnat) stands for the way Prophet Mohammad (saws) lived his life. The Sunnah (Sunnat ) is the second source of Islamic way of life, the first being Holy Quran. Both sources are very important; one cannot practice Islam without consulting both of them.

It should be understood that the guidelines given in the Quran had been practiced by the Prophet(saws) in his life and his companions had also strictly followed them.

It is very important for the current generation of Muslims to know and understand the holy Quran. It is also necessary to know, how its guidelines had been implemented y the Prophet (saws).

For instance, when we read instructions in the Quran to establish Salat (Namaz) or Pay Alms (Zakat), we should know how they were practiced by the Prophet (saws) to implement the same. There are many other guidelines in Quran which require guidance from the life of the Prophet (saws). Therefore it is evident from the above that Quran and Sunnah are the sources to practice Islam.

Hadis ( Hadiths)    

Hadis (Hadiths) means the literature which consists of the sayings and actions of the Prophet.

Allah preserved the Ahadis ( Plural of Hadis ) by enabling the companions and those after them to memorize and pass on the statements of the Prophet (saws ) and the descriptions. In this way, practicing the Sunnah (Sunnat ) continued.

 Most Authentic Books of Hadis 

 
1. Saheeh Al-Bukhaari:

The word "Saheeh" means "authentic". Saheeh Al-Bukhaari was compiled by Imaam Mohammad Bin Ismaa'eel Bukhari, born in 194 AH in Bukhaara, central Asia. He travelled at an early age for seeking knowledge to Hijaaz (Mecca and Madinah), Syria, Iraq, Egypt etc. He devoted more than 16 years of his life to the actual compilation of this work. It is said that Imaam Al-Bukhaari collected over 600,000 Ahadis. He had removed most of the unreliable Ahadis. His book 'Saheeh Al-Bukhaari', is the most authentic book of Ahadis. Imaam Al-Bukhaari died in his hometown, Bukhaara in the territory of Khurasaan (West Turkistan), in the year 256 AH.

Before he recorded each Hadis, he would perform ablution and offer a two-Rakat prayer and supplicate to Allah. Many religious scholars of Islam unanimously agreed that the most authentic book after the Book of Allah is Saheeh Al-Bukhaari. His book contains 2230 non-repeated and 7275 repeated ones.

  2. Saheeh Muslim:   

Saheeh Muslim is the second most authentic book of Hadis after Saheeh Al-Bukhaari, compiled by Imaam Muslim Bin Hajaaj. He was Born in 202 AH in the city of Nishapur of Northeastern Iran, who died in 261 AH. He travelled to gather his collection of Ahadis to Iraq, Hijaaz, Syria, and Egypt. He learnt from Imaam Al-Bukhaari himself and became his most loyal student.

The book contains 4000 non-repeated Ahadis and 12000 repeated ones.

Saheeh Al-Bukhaari is preferred over Saheeh Muslim based on the authenticity of the Ahadis. Imaam Al-Bukhaari was more strict in selecting Ahadis than Imaam Muslim .


3. Malik's Muwatta   


This was compliled by Imaam Maalik bin Anas. He was born in 93 AH and died in 179 AH. He lived most of his life in Madinah. He was a scholar of Islam, and is the originator of the Maliki judicial school of thought. He is reputed to have had over one thousand students. During Malik's lifetime, he steadily revised his Muwatta, so it reflects over forty years of his learning and knowledge. It contains a few thousand Ahadis. 


4. Abu-Dawud 

 This was compiled by Imaam Abu-Dawud Sulaiman bin Aash'ath was born in 202 AH in the Iranian city of Sistaan and died in 275 AH. He was one of the most widely travelled of the scholars of Ahadis, going to Saudi Arabia, Iraq, Khurasaan, Egypt, Syria, Nishapur, Marv, and other places for the sole purpose of collecting Ahadis. From about 500,000 Ahadis, he chose 4,800, Each report in his collection was checked for compatibility with the Qur'an, his collection is recognized by the majority of the Muslim world, however it is also known to contain some weak Ahadis (some of which he pointed out). His famous book is Sunan Abu Dawood.

5. Tirmizi  

This was compiled by Imam "Mohammad Bin Isa Tirmizi ". He was born in the Iranian city of Tirmiz in 209 AH and died in 279 AH. He collected 300,000 ahaadith and selected 3,115. He was born during the reign of the Abbasid Khalifa Mamoon al Rasheed. Umar bin Abdul Aziz, initiated a movement for the compilation of the Ahadis of Nabi [saws]. This gigantic task was undertaken by six towering scholars of Islam. One of them was Imaam Mohammed bin Isa Tirmizi.

He obtained his basic knowledge at home and later travelled to other places. He studied Hadis under great personalities such as Imaam Bukhari, Imaam Muslim and Imaam Abu Dawood. Once Imaam Bukhari mentioned to him "I have benefited more from you than you have benefited from me."

 6. Ibne Maaja  


This was compiled by Imam Muhammad Bin Zayd Bin Maaja. He was from the Iranian city of Qazwin. He was born in 209 AH and died in 273 AH. He travelled to gather his collection of Ahadis to Kufa, Baghdad, Mecca, Syria and Egypt. He collected 400,000 ahaadith and selected only 4,000 for his book. His book is named as Sunan Ibn Maaja.

 

 7. Nisayee 

This was compiled by Imam Ahmad Bin Shoeb Nisayee.  He was born  in the village of Nisa in the province of Khurasaan in Iran in 215 AH and died in 303 AH. in Iran. He had traveled many countries for collection of Ahadis. He collected 200,000 Ahadis and selected 4,321 for his book. 

 

If you have any feedback please revert to:  arifrk43@gmail.com

 

____________________________________________________________________

 


سنّت اور حدیث 

سنّت

اسلام میں، عربی زبان میں  لفظ سنت یہ ظاہر کرتا ہے کہ  نبی صلی اللہ علیہ وسلم نےکس طرح  اپنی زندگی گزاری . سنت  اسلامی زندگی گزارنے کا  دوسرا ذریعہ ہے اور  پہلا قرآن کریم. دونوں ذرائع بہت اہم ہیں؛ کوئی بھی شخص اپنی زندگی اسلام پر نہیں گزار سکتا جب تک کہ دونوں کو نہ اپناۓ.

یہ سمجھنا  چاہئے کہ نبی صلی اللہ علیہ وسلم نے  قرآن میں دی گئی ہدایتیں پر اپنی زندگی گزاری تھی  اور ان کے ساتھیوں نے ان کی پیروی کی تھی.

یہ بہت ضروری ہے کہ مسلمانوں کی موجودہ نسل  نے  قرآن کریم کو جاننا  اور سمجھنا  چاہئے  . یہ بھی ضروری ہے کہ نبی صلی اللہ علیہ وسلم نے ان  ہدایت کو کیسے اپنایا تھا

مثال کے طور پر، جب ہم قرآن کریم میں نماز کے بارے اور ذکات ادا کرنے کے بارے  میں  ہدایتیں پڑھتے ہیں تو ہمیں یہ معلوم ہونا چاہئے کہ  نبی صلی اللہ علیہ وسلم نے ان کو کس طریقے سے ادا کیا  تھا.  قرآن کریم میں اور بھی  بہت ساری ہدایتیں ہیں جن پر الله کے نبی نے عمل کیا  جو ہماری رہنمائی کر سکتی ہیں   لہذا مندرجہ بالا سے واضح ہے کہ قرآن و سنت، اسلام پر عمل کرنےکے لئے دونوں  ہی  ذرائع ہیں.

حدیث 

حدیث  کا مطلب ہے کہ ایسا  ادب جس میں نبی صلی اللہ علیہ وسلم کی باتوں اور اعمال پر مشتمل ہے اللہ

 تعا لٰی نے صحابہ اور ان کے بعد والے ایمان والوں کے ذریعہ نبی صلی اللہ علیہ و سلم  کے بیانات یعنی

 احادیث کی حفاظت کی ہے ، اس طرح سنّت کا سلسلہ جاری رہا 

  سب سے زیادہ مستند حدیث کی  کتابیں

 

 1:    صحیح البخاری   

لفظ " صحیح  " کا مطلب ہے "مستند". صحیح ال بخاری کو  امام بخاری نے مرتب کیا تھا   امام محمد بن اسماعیل  بخاری،  جو ١٩٤  ھ میں بخارا ، مرکزی  ایشیا میں پیدا ہوئے. انہوں نے ابتدائی عمر میں حجاز  (مکہ اور مدینہ)، شام، عراق، مصر وغیرہ کا سفر علم حاصل  کرنے کے لئے  کیا. انہوں نے  نے اپنی زندگی کے 16 سال سے زائد  اس کام کی تالیف پر وقف کیا ہے . یہ کہا جاتا ہے کہ امام امام بخاری نے ٦ لاکھ  احادیث کو جمع کیا. انہوں نے انتہائی ناقابل یقین احادیث کو ہٹا دیا تھا.  ان  کی کتاب " صحیح  ال بخاری"  احادیث کی سب سے زیادہ مستند کتاب ہے.  امام  بخاری نے خراسان (مغربی ترکستان) کے علاقے میں اپنے آبائی شہر، بخارا میں ٢٥٦ ھ میں  وفات پائی. ہر حدیث کو درج کرنے سے قبل وہ وضو کرتے  دو رکعت نماز پیش کرتے اور اللہ کی طرف دعا کرتے . اسلام کے بہت سے مذہبی علماء نے متفقہ طور پر اتفاق کیا کہ اللہ کی کتاب کے بعد سب سے زیادہ مستند  کتاب صحیح بخاری ہے.  یہ  کتاب   ایک بار لکھی گئی ٢٢٣٠  احادیث  اور بار بار لکھی گئی  ٧٢٧٥   احادیث  پرمشتمل ہے

 

2صحیح مسلم     : 

  صحیح مسلم ، صحیح بخاری کے بعد یہ حدیث کی دوسری مستند کتاب ہے. اس کتاب کو امام مسلم بن حجاج نے مرتب کیا ہے. امام مسلم شمال مشرقی ایران میں شہر نیشاپور میں ٢٠٢ ھ میں پیدا ہوئے تھے. ان کا انتقال  261 ھ ہوا . انہوں نے عراق، حجاز، شام اور مصر کا  سفر  احادیث  جمع کرنے کے لئے  کیا. انہوں نے امام  بخاری سے علم حاصل کیا اور ان کے وفادار طالب علم بن گئے . یہ کتاب ایک بار لکھی گئی ٤ ہزار احادیث اور بار بار لکھی گئی ٢ ١  ہزار احادیث پر مشتمل ہے  

احادیث کی صداقت کی بنیاد پر صحیح بخاری کو صحیح مسلم پر ترجیح دی جاتی ہےدراصل امام بخاری احادیث کو منتخب کرنے میں زیادہ سختی برتتے تھے 

3.   مالک مووتا

مالک مووتایہ کتاب امام مالک  بن انس کی طرف سے مرتب  کی گئی ہے . وہ  ٩٣  ھ میں پیدا ہوئے  اور ١٧٩ ھ میں انتقال فرما گئے . اپنی زندگی میں وہ زیادہ تر مدینہ میں رہے . وہ اسلام کے ایک عالم تھے  اور مالکی مدرسہ  عدلیہ کے بانی ہیں . ان کے لئے یہ شوہرت اورعزت کی بات تھی کہ ان کے  ایک لاکھ طالب تھے. امام مالک  کی زندگی کے  دوران انہوں نے  اپنے مووتا پر مسلسل نظر ثانی کی، لہذا یہ ان کی تعلیم کے چالیس سال پر اثر ڈالتا ہے . اس میں چند ہزار احادیث شامل ہیں

4.    ابو داؤد

 

یہ کتاب امام ابو داؤد سلیمان بن آشت کی  طرف سے مرتب کی گئی ہے امام ابو داؤود ٢٠٢ ھ میں ایران کے شہر سیستان میں پیدا ہوئے ان کا انتقال ٢٧٥ ھ میں ہوا. وہ سب سے زیادہ وسیع پیمانے پر سفر کرنے والے احادیث  کے علماء میں سے تھے . انہوں نے سعودی عرب، عراق، خراسانان، مصر، شام، نیشا پور، ماروی کا سفر احادیث کو جمع کرنے کے واحد مقصد کے لۓ کیا . انہوں نے ٥ لاکھ احادیث جمع کی اور تقریبا ٤٨٠٠ کو منتخب کیا  ان کی جمع کی گئی احادیث کی جانچ قرآن  کے ساتھ کی گئی  ، مجموعی طور پر دنیا کے مسلمانوں کی  اکثریت اس کو تسلیم کرتی ہے ، لیکن اس میں کچھ کمزور احادیث بھی شامل ہیں . ان کی مشہور کتاب سنن ابو داؤد ہے

 

 

5.    ترمذی

 یہ کتاب  امام محمد بن عیسئی ترمذی نے  مرتب کیا ہے . یہ امام ٢٠٩  ھ میں ایرانی شہر ترمز  میں پیدا ہوئے  اور ٢٧٩  ھ میں انکا انتقال ہوا. انہوں نے ٣ لاکھ احادیث جمع کی اور ٣١١٥ کاانتخاب کیا . . وہ عباس خلیفہ مامون الرشید  کے دور میں پیدا ہوئے تھے. خلیفہ عمر بن عبدالعزیز نے نبی صلی اللہ علیہ وسلم نے احادیث کی تالیف کے لئے ایک تحریک شروع کی. اس عظیم کام کو اسلام کے چھ ٹھوس عالموں نے شروع کیا تھا . ان میں سے ایک امام  محمد بن عیسئی ترمذی   تھے.

انہوں نے اپنا  بنیادی علم  گھر میں حاصل کیا اور بعد میں دوسرے مقامات پر سفر کیا. انہوں نے عظیم شخصیات جیسے  امام بخاری، امام مسلم اور امام ابو داؤد سے بھی علم حاصل کیا . ایک بار امام بخاری نے ان سے  کہا کہ "میں نے تم سے بہت  فائدہ اٹھایا ہے،  بجائے اس کے کہ تم کو مجھ سے کچھ فایدہ ملا "

 6. ابن ماجہ

ہ  کتاب  امام محمد بن زید بن ماجہ  کی طرف سے مرتب کی گئی . وہ ایرانی شہر قازون سےتعلق رکھتے تھے . وہ  ٢٠٩ ھ میں  پیدا ہوئے  اور ٢٧٣  ھ میں انتقال کر گئے . انہوں نے احادیث کو  جمع کرنے کے لئے کوفہ، بغداد، مکہ، شام اور مصر کا  سفر کیا. انہوں نے ٤ لاکھ  احادیث کو جمع کیا اور اپنی کتاب کے لئے صرف ٤ ہزار احادیث کو  منتخب کیا. ان  کی کتاب کا نام سنن ابن ماجہ ہے

.

 7 نسائی          

     

یہ کتاب امام احمد بن شوب شعیب نسائی  کی طرف سے مرتب کی گئی ہے . وہ  ٢١٥  ھجری میں ایران کے خراسان  میں پیدا ہوئے اور ٣٠٣ ھ میں انکا انتقال ہو گیا .  انہوں نے احادیث کو جمع کرنے کے لئے بہت سے ممالک کا سفر کیا تھا. انہوں نے ٢ لاکھ احادیث کو جمع کیا اور اس کی کتاب کے لئے ٤٣٢١  کا انتخاب کیا.

If you have any feedback please revert to:  arifrk43@gmail.com

  

____________________________________________________________________________________________




Comments